سال کے درمیان میں نصاب گھٹ جاۓ

🌻 *تاریخ* 🌻
_*☪ ٤شعبان المعظم١٤٤١ھ*_
_*🔆 30مارچ2020*_
🌤 بروز۔ *پیر*
📓 *مسٸلہ* 📙
✒ سال کے درمیان میں نصاب گھٹ جاۓ؟
📙 اگر شروع اور اخیر سال میں نصاب پورا تھا مگر در میان سال میں اس کی مقدارکم رہی تب
بھی پورے نصاب کی زکوۃ واجب ہوگی۔واللہ اعلم بالصواب۔
(مستفاد: کتاب المساٸل
📚 ولكن هذا الشرط يعتبر في أول الحول واخره لافي خلاله حتى لو انتقص النصاب في أثناء الحول ثم كمل في اخرہ تجب الزكاة. (بدائع الصنائع ۹۹/۲، هندية ۱۷۰/۱ ، تاتارخانية زکریا ۱۸۱٫۳ 📚
حدیث النبیﷺ۔۔وَعَنْ عَمْرِو بْنِ الْحَمِقِ قَالَ: سَمِعْتُ رَسُولَ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسلم يَقُول: «من أَمَّنَ رَجُلًا عَلَى نَفْسِهِ فَقَتَلَهُ أُعْطِيَ لِوَاءَ الْغَدْرِ يَوْمَ الْقَيَامَةِ» . رَوَاهُ فِي شَرْحِ السُّنَّةِ
حضرت عمرو بن حمق ؓ بیان کرتے ہیں ، میں نے رسول اللہ صلی ‌اللہ ‌علیہ ‌وآلہ ‌وسلم کو فرماتے ہوئے سنا :’’ جس شخص نے کسی شخص کو جان کی امان دی اور پھر اسے قتل کر دیا تو روزِ قیامت اسے عہد شکنی کا پرچم دیا جائے گا ۔‘‘ صحیح ، رواہ فی شرح السنہ ۔
أوکماقال النبی ﷺ۔
(مشکوةشریف حدیث نمبر ٣٩٧٩)
ناقل✍ہدایت اللہ قاسمی
خادم مدرسہ رشیدیہ ڈنگرا،گیا،بہار
HIDAYATULLAH
TEACHER MADARSA RASHIDIA DANGRA GAYA BIHAR INDIA
نــــوٹ:دیگر مسائل کی جانکاری کے لئے رابطہ بھی کرسکتے ہیں
CONTACT NO
6206649711
🇮🇳🇮🇳🇮🇳🇮🇳🇮🇳🇮🇳

سوشل میڈیا پر ہمیں فالو کریں
سوشل میڈیا پر شیئر کریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے